دنیا کے دس ممالک ۔

“ﺩﻧﯿﺎ ﮐﮯ ﺩﺱ ﭼﮭﻮﭨﮯ ﻣﻤﺎﻟﮏ”.
ﺍٓﺝ آپ ﮐﻮ ﺭﻗﺒﮯ ﮐﮯ ﻟﺤﺎﻅ ﺳﮯ ﺩﻧﯿﺎ ﮐﮯ ﺩﺱ ﭼﮭﻮﭨﮯ ﺗﺮﯾﻦ ﻣﻤﺎﻟﮏ ﮐﮯ ﺑﺎﺭﮮ ﺑﺘﺎﺗﮯ ﮨﯿﮟ۔ ﺟﻦ ﮐﺎ ﺭﻗﺒﮧ ﺍٓﭖ ﮐﮯ ﺷﮩﺮ ﺳﮯ ﺑﮭﯽ ﮐﻢ ﮨﻮﺳﮑﺘﺎ ﮨﮯ۔
1 ۔ ﻭﯾﭩﯿﮑﻦ ﺳﭩﯽ ( ﺭﻗﺒﮧ – 0.44 ﻣﺮﺑﻊ ﮐﻠﻮﻣﯿﭩﺮ ) : ﺍﭨﻠﯽ ﮐﮯ شہر روم ﻣﯿﮟ ﻭﺍﻗﻊ ﻭﯾﭩﯿﮑﻦ ﺳﭩﯽ ﺩﻧﯿﺎ ﮐﺎ ﺳﺐ ﺳﮯ ﭼﮭﻮﭨﺎ ﻣﻠﮏ ﮨﮯ۔ ﺍﯾﮏ ﮔﺎﺅﮞ ﺳﮯ ﺑﮭﯽ ﭼﮭﻮﭨﺎ۔ ﺟﺲ ﮐﯽ ﭘﻮﺭﯼ ﺳﺮﺣﺪ ﺍٓﺩﮬﮯ ﮐﻠﻮﻣﯿﭩﺮ ﺳﮯ ﺑﮭﯽ ﮐﻢ ﮨﮯ۔ ﺁﭖ 20 ﻣﻨﭧ ﻣﯿﮟ ﺍﺱ ﮐﮯ ﺍﯾﮏ ﮐﻮﻧﮯ ﺳﮯ ﺩﻭﺳﺮﮮ ﮐﻮﻧﮯ ﻣﯿﮟ ﭘﯿﺪﻝ ﮨﯽ ﭘﮩﻨﭻ ﺟﺎﺗﮯ ﮨﯿﮟ۔
یہاں اطالوی اور لاطینی زبانیں بولی جاتی ہیں, طرز حکومت ملوکیت ہے اور کیتھولک مذہب بلکہ اس چھوٹی خودمختار ریاست کو کیتھولک کا دارلخلافہ کہا جاتا ہے, اٹلی کے تسلط سے ویٹیکن سٹی کو آزادی 1929 میں حاصل ہوئی, ریاست کا سربراہ پاپائے روم کہا جاتا ہے جس کی رہائش گاہ اپوسٹالک پیلیس اور رومی کریا بھی یہیں واقع ہیں.
رومی کریا کی بنیاد پاپ سکسٹ پنجم نے سولہویں صدی میں رکھی تھی جس کے مقاصد سماجی اور مذہبی تھے لیکن انیسویں صدی تک پیدمنتیرز کی اطالوی حکومت کے تیزی سے پھیلنے کی وجہ سے اس کے اختیارات کم ہونے لگے تھے اور 1870 تک روم اطالوی حکومت کے زیراثر آچکا تھا اور پاپائیت کا چراغ بجھنے لگا تھا. 1919 تک اطالوی حکومت پورے جزیرہ نما بشمول سسلی پر اختیار حاصل کر چکی تھی. 1929 میں پاپائے روم اور اطالوی حکومت لیٹرن معاہدہ پر متفق ہوئے جس کی رُو سے ویٹیکن سٹی کو ایک آزاد ریاست تسلیم کرلیا گیا.
پاکستان سے ویٹیکن سٹی کے بے حد اچھے مراسم ہیں وہاں پاکستانی سفیر تعینات ہے اور پاکستان میں کیتھولک عیسائیوں کے ساتھ عمومی رویہ دونوں ریاستوں کے درمیان باہمی گفتگو کا بنیادی موضوع ہے.
2 ۔ ﻣﻮﻧﺎﮐﻮ ( 2.02 ﻣﺮﺑﻊ ﮐﻠﻮﻣﯿﭩﺮ ) : ﻣﻮﻧﺎﮐﻮ ﻓﺮﺍﻧﺲ ﮐﮯ ﺳﺎﺗﮫ ﺳﻤﻨﺪﺭ ﮐﮯ ﮐﻨﺎﺭﮮ ﻭﺍﻗﻊ ﺍﯾﮏ ﻣﻠﮏ ﮨﮯ۔ ﯾﮩﺎﮞ ﺍﻣﯿﺮ ﻟﻮﮒ ﻣﻮﺝ ﻣﺴﺘﯽ ﮐﺮﻧﮯ ﺁﺗﮯ ﮨﯿﮟ۔ ﻣﻮﻧﺎﮐﻮ ﺳﺐ ﺳﮯ ﭼﮭﻮﭨﮯ ﻣﻤﺎﻟﮏ ﻣﯿﮟ ﺳﮯ ﮨﻮﻧﮯ ﮐﮯ ﺑﺎﻭﺟﻮﺩ ﺑﮭﯽ ﺍﻧﺘﮩﺎﺋﯽ ﺍﻋﻠﯽ ﻣﻌﯿﺸﺖ ﻭﺍﻻ ﻣﻠﮏ ﮨﮯ۔
3 ۔ ﻧﻮﺭﻭ ( 21 ﻣﺮﺑﻊ ﮐﻠﻮﻣﯿﭩﺮ ) : ﻧﻮﺭﻭ ﺩﻧﯿﺎ ﮐﺎ ﺳﺐ ﺳﮯ ﭼﮭﻮﭨﺎ ﺟﺰﯾﺮﮦ ﻧﻤﺎ ﻣﻠﮏ ﮨﮯ۔ ﯾﻌﻨﯽ ﻣﺤﺾ ﺍﯾﮏ ﺟﺰﯾﺮﮮ ﭘﺮ ﺳﻤﭩﺎ ﮨﻮﺍ ﺳﺐ ﺳﮯ ﭼﮭﻮﭨﺎ ﻣﻠﮏ۔ ﯾﮧ ﺑﺤﺮ ﺍﻭﻗﯿﺎﻧﻮﺱ ﮐﮯ ﺑﺎﻟﮑﻞ ﺩﺭﻣﯿﺎﻥ ﻣﯿﮟ ﻭﺍﻗﻊ ﮨﮯ۔
4 ۔ ﺗﻮﻟﻮ ( 26 ﻣﺮﺑﻊ ﮐﻠﻮﻣﯿﭩﺮ ) : ﮨﻮﺍﺋﯽ ﺍﻭﺭ ﺁﺳﭩﺮﯾﻠﯿﺎ ﮐﮯ ﺩﺭﻣﯿﺎﻥ ﺍٓﺑﺎﺩ ﺗﻮﻟﻮ ﻣﻠﮏ ﻣﺤﺾ 3 ﺟﺰﺍﺋﺮ ﺗﮏ ﺳﻤﭩﺎ ﮨﻮﺍ ﮨﮯ۔
5 ۔ ﺳﺎﻥ ﻣﺎﺭﯾﻨﻮ ( 61 ﻣﺮﺑﻊ ﮐﻠﻮﻣﯿﭩﺮ ) : ﺍﭨﻠﯽ ﮐﮯ ﺩﺭﻣﯿﺎﻥ ﺑﺴﺎ ﺳﺎﻥ ﻣﺎﺭﯾﻨﻮ ﺩﻧﯿﺎ ﮐﺎ ﺳﺐ ﺳﮯ ﻗﺪﯾﻢ ﻣﻠﮏ ﺑﮭﯽ ﺗﺼﻮﺭ ﮐﯿﺎ ﺟﺎﺗﺎ ﮨﮯ۔
6 ۔ ﻟﭽﭩﯿﻦ ﺳﭩﯿﻦ ( 160 ﻣﺮﺑﻊ ﮐﻠﻮﻣﯿﭩﺮ ) : ﺍﺱ ﻣﻠﮏ ﮐﮯ ﺑﺎﺭﮮ ﻣﯿﮟ ﺷﺎﯾﺪ ﮨﯽ ﮐﺴﯽ ﻧﮯ ﺳﻨﺎ ﮨﻮ، ﻟﯿﮑﻦ ﯾﮧ ﻣﻠﮏ ﺟﯽ ﮈﯼ ﭘﯽ ﮐﮯ ﻟﺤﺎﻅ ﺳﮯ ﺩﻧﯿﺎ ﻣﯿﮟ ﻧﻤﺒﺮ 1 ﮨﮯ۔ ﯾﮧ ﺟﺮﻣﻦ ﺯﺑﺎﻥ ﺑﻮﻟﻨﮯ ﻭﺍﻟﻮﮞ ﮐﺎ ﻭﺍﺣﺪ ﻣﻠﮏ ﮨﮯ ﺟﮩﺎﮞ ﭘﮩﺎﮌﯼ ﺳﻠﺴﻠﮯ ﮨﯽ ﺳﻠﺴﻠﮯ ﮨﯿﮟ۔ ﺍﻭﺭ ﺟﮩﺎﮞ ﮐﻮﺋﯽ ﺍﺋﺮ ﭘﻮﺭﭦ ﻧﮩﯿﮟ۔
7 ۔ﺳﯿﻨﭧ ﮐﭩﺲ ﺍﯾﻨﮉ ﻧﯿﻮﺱ ( 261 ﻣﺮﺑﻊ ﮐﻠﻮﻣﯿﭩﺮ ) : ﺳﯿﻨﭧ ﮐﭩﺲ ﺍﯾﻨﮉ ﻧﯿﻮﺱ ﺍﻣﺮﯾﮑﯽ ﺑﺮﺍﻋﻈﻢ ﮐﺎ ﺳﺐ ﺳﮯ ﭼﮭﻮﭨﺎ ﻣﻠﮏ ﮨﮯ۔ ﯾﮧ ﻭﯾﺴﭧ ﺍﻧﮉﯾﺰ ﮐﯽ ﮐﺎﻟﻮﻧﯿﻮﮞ ﻣﯿﮟ ﺳﮯ ﺍﯾﮏ ﮐﺎﻟﻮﻧﯽ ﮨﮯ ۔ ﯾﮧ ﺩﻭ ﺟﺰﺍﺋﺮ ﭘﺮ ﻣﺸﺘﻤﻞ ﮨﮯ ﺟﺲ ﭘﺮ ﮐﮩﺎ ﺟﺎﺗﺎ ﮨﮯ ﮐﮧ ﯾﻮﺭﭘﯿﻦ ﻧﮯ ﺍﻣﺮﯾﮑﮧ ﮐﯽ ﺩﺭﯾﺎﻓﺖ ﮐﮯ ﻭﻗﺖ ﺳﺐ ﺳﮯ ﭘﮩﻠﮯ ﺍﻥ ﺟﺰﺍﺋﺮ ﭘﺮ ﻗﺒﻀﮧ ﮐﯿﺎ ﺗﮭﺎ۔
8 ۔ ﻣﺎﻟﺪﯾﭗ ( 300 ﻣﺮﺑﻊ ﮐﻠﻮﻣﯿﭩﺮ ) : ﻣﺎﻟﺪﯾﭗ ﺍﯾﺸﯿﺎ ﮐﺎ ﺳﺐ ﺳﮯ ﭼﮭﻮﭨﺎ ﻣﻠﮏ ﮨﮯ۔ ﭼﺎﮨﮯ ﻭﮦ ﺭﻗﺒﮧ ﮐﯽ ﺑﺎﺕ ﮨﻮ، ﯾﺎ ﺁﺑﺎﺩﯼ ﮐﯽ۔ ﺳﻤﻨﺪﺭ ﮐﮯ ﺩﺭﻣﯿﺎﻥ ﺑﺴﺎ ﭼﮭﻮﭨﺎ ﺳﺎ ﻣﻠﮏ۔
9 ۔ ﻣﺎﻟﭩﺎ ( 316 ﻣﺮﺑﻊ ﮐﻠﻮﻣﯿﭩﺮ ) : ﻣﺎﻟﭩﺎ ﮨﮯ ﺗﻮ ﭼﮭﻮﭨﺎ ﺳﺎ، ﯾﻮﺭﭖ ﻣﯿﮟ ﺳﺐ ﺳﮯ ﮔﻨﺠﺎﻥ ﺁﺑﺎﺩﯼ ﻭﺍﻻ ﻣﻠﮏ ﮨﮯ۔ ﻣﺤﺾ 316 ﻣﺮﺑﻊ ﮐﻠﻮﻣﯿﭩﺮ ﮐﺎ ﯾﮧ ﻣﻠﮏ ﮨﻤﺎﺭﮮ ﻣﻠﮏ ﮐﮯ ﮐﺴﯽ ﺑﮍﮮ ﺿﻠﻊ ﺳﮯ ﺑﮭﯽ ﭼﮭﻮﭨﺎ ﮨﮯ۔
10 ۔ ﮔﺮﻧﺎﺩﺍ۔ 344 ﻣﺮﺑﻊ ﮐﻠﻮﻣﯿﭩﺮ : ﯾﮧ ﺍﯾﮏ ﺟﺰﯾﺮﮦ ﮨﮯ ﺟﻮﮐﮧ ﮐﺮﯾﺒﯿﻦ ﺳﻤﻨﺪﺭ ﮐﮯ ﺩﺭﻣﯿﺎﻥ ﻣﯿﮟ ﺍٓﺗﺎ ﮨﮯ۔ ﯾﮧ ﺟﺰﯾﺮﮦ ﺍﭘﻨﮯ ﻣﺼﺎﻟﺤﮧ ﺟﺎﺕ ﮐﯽ ﻭﺟﮧ ﺳﮯ ﺑﮭﯽ ﺑﮩﺖ ﻣﺸﮩﻮﺭ ﮨﮯ۔ ﺟﺎﺋﻔﻞ ﺍﻭﺭ ﺩﺍﺭ ﭼﯿﻨﯽ ﮐﯽ ﺳﺐ ﺳﮯ ﺯﯾﺎﺩﮦ ﭘﯿﺪﺍﻭﺍﺭ ﺑﮭﯽ ﺍﺳﯽ ﻣﻠﮏ ﻣﯿﮟ ﮨﻮﺗﯽ ﮨﮯ۔